69

حکومت اور اتحادیوں نے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کیخلاف تحریک عدم اعتماد جمع کرادی

اسلام آباد: اپوزیشن کی جانب سے چیئرمین سینیٹ کے خلاف تحریک عدم اعتماد لائے جانے کے بعد حکومت اور اس کے اتحادیوں نے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کی تبدیلی کا فیصلہ کرلیا۔

سینیٹ میں قائد ایوان شبلی فراز، بلوچستان عوامی پارٹی اور فاٹا کے سینیٹرز نے مشاورت کے بعد ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کو ہٹانے کا فیصلہ کیا۔

ذرائع کے مطابق حکومتی جماعت پی ٹی آئی اور دیگر اتحادی جماعتوں نے ڈپٹی چیئرمین سینیٹ سلیم مانڈوی والا کےخلاف تحریک عدم اعتماد کی قرارداد سینیٹ میں جمع کرادی ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سینیٹر شبلی فراز نے کہا کہ 26 دستخط کے ساتھ تحریک عدم اعتماد کی قرارداد جمع کرادی، ڈپٹی چیئرمین کے الیکشن میں پی ٹی آئی اور اتحادیوں کی تعداد 36 تھی، ہم نے سلیم مانڈوی والا کو ووٹ دیا تھا، اب وہ ہماری حمایت کے حقدار نہیں۔

واضح رہے کہ چند روز قبل حکومت مخالف احتجاجی تحریک چلانے سے متعلق اپوزیشن کی 9 سیاسی جماعتوں کے 11 اراکین پر مشتمل رہبر کمیٹی نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کو ہٹانے کا فیصلہ کیا تھا۔

اپوزیشن نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کے خلاف تحریک عدم اعتماد سینیٹ میں جمع کرادی ہے اور نئے چیئرمین سینیٹ کے لیے حاصل بزنجو کو اپوزیشن کا متفقہ امیدوار نامزد کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں